الانسان   سورة  : Al-Insaan

سورة Sura   الانسان   Al-Insaan
وَمِنَ اللَّيْلِ فَاسْجُدْ لَهُ وَسَبِّحْهُ لَيْلًا طَوِيلًا (26) إِنَّ هَٰؤُلَاءِ يُحِبُّونَ الْعَاجِلَةَ وَيَذَرُونَ وَرَاءَهُمْ يَوْمًا ثَقِيلًا (27) نَّحْنُ خَلَقْنَاهُمْ وَشَدَدْنَا أَسْرَهُمْ ۖ وَإِذَا شِئْنَا بَدَّلْنَا أَمْثَالَهُمْ تَبْدِيلًا (28) إِنَّ هَٰذِهِ تَذْكِرَةٌ ۖ فَمَن شَاءَ اتَّخَذَ إِلَىٰ رَبِّهِ سَبِيلًا (29) وَمَا تَشَاءُونَ إِلَّا أَن يَشَاءَ اللَّهُ ۚ إِنَّ اللَّهَ كَانَ عَلِيمًا حَكِيمًا (30) يُدْخِلُ مَن يَشَاءُ فِي رَحْمَتِهِ ۚ وَالظَّالِمِينَ أَعَدَّ لَهُمْ عَذَابًا أَلِيمًا (31)
المرسلات Al-Mursalaat
وَالْمُرْسَلَاتِ عُرْفًا (1) فَالْعَاصِفَاتِ عَصْفًا (2) وَالنَّاشِرَاتِ نَشْرًا (3) فَالْفَارِقَاتِ فَرْقًا (4) فَالْمُلْقِيَاتِ ذِكْرًا (5) عُذْرًا أَوْ نُذْرًا (6) إِنَّمَا تُوعَدُونَ لَوَاقِعٌ (7) فَإِذَا النُّجُومُ طُمِسَتْ (8) وَإِذَا السَّمَاءُ فُرِجَتْ (9) وَإِذَا الْجِبَالُ نُسِفَتْ (10) وَإِذَا الرُّسُلُ أُقِّتَتْ (11) لِأَيِّ يَوْمٍ أُجِّلَتْ (12) لِيَوْمِ الْفَصْلِ (13) وَمَا أَدْرَاكَ مَا يَوْمُ الْفَصْلِ (14) وَيْلٌ يَوْمَئِذٍ لِّلْمُكَذِّبِينَ (15) أَلَمْ نُهْلِكِ الْأَوَّلِينَ (16) ثُمَّ نُتْبِعُهُمُ الْآخِرِينَ (17) كَذَٰلِكَ نَفْعَلُ بِالْمُجْرِمِينَ (18) وَيْلٌ يَوْمَئِذٍ لِّلْمُكَذِّبِينَ (19)
الصفحة Page 580
(26) اور رات کو بڑی رات تک سجدے کرو اور اس کی پاکی بیان کرتے رہو
(27) یہ لوگ دنیا کو دوست رکھتے ہیں اور (قیامت کے) بھاری دن کو پس پشت چھوڑے دیتے ہیں
(28) ہم نے ان کو پیدا کیا اور ان کے مقابل کو مضبوط بنایا۔ اور اگر ہم چاہیں تو ان کے بدلے ان ہی کی طرح اور لوگ لے آئیں
(29) یہ تو نصیحت ہے۔ جو چاہے اپنے پروردگار کی طرف پہنچنے کا رستہ اختیار کرے
(30) اور تم کچھ بھی نہیں چاہ سکتے مگر جو خدا کو منظور ہو۔ بےشک خدا جاننے والا حکمت والا ہے
(31) جس کو چاہتا ہے اپنی رحمت میں داخل کرلیتا ہے اور ظالموں کے لئے اس نے دکھ دینے والا عذاب تیار کر رکھا ہے
المرسلات Al-Mursalaat
(1) ہواؤں کی قسم جو نرم نرم چلتی ہیں
(2) پھر زور پکڑ کر جھکڑ ہو جاتی ہیں
(3) اور (بادلوں کو) پھاڑ کر پھیلا دیتی ہیں
(4) پھر ان کو پھاڑ کر جدا جدا کر دیتی ہیں
(5) پھر فرشتوں کی قسم جو وحی لاتے ہیں
(6) تاکہ عذر (رفع) کردیا جائے یا ڈر سنا دیا جائے
(7) کہ جس بات کا تم سے وعدہ کیا جاتا ہے وہ ہو کر رہے گی
(8) جب تاروں کی چمک جاتی رہے
(9) اور جب آسمان پھٹ جائے
(10) اور جب پہاڑ اُڑے اُڑے پھریں
(11) اور جب پیغمبر فراہم کئے جائیں
(12) بھلا (ان امور میں) تاخیر کس دن کے لئے کی گئی؟
(13) فیصلے کے دن کے لئے
(14) اور تمہیں کیا خبر کہ فیصلے کا دن کیا ہے؟
(15) اس دن جھٹلانے والوں کے لئے خرابی ہے
(16) کیا ہم نے پہلے لوگوں کو ہلاک نہیں کر ڈالا
(17) پھر ان پچھلوں کو بھی ان کے پیچھے بھیج دیتے ہیں
(18) ہم گنہگاروں کے ساتھ ایسا ہی کیا کرتے ہیں
(19) اس دن جھٹلانے والوں کی خرابی ہے